نواز کا سارک کانفرنس میں ہندوستانی کار استعمال کرنے سے انکار

nawaz

وزیر اعظم پاکستان نواز شریف نے آئندہ ہفتے کٹھمنڈو میں ہونے والے سارک کانفرنس کے موقع پر ہندوستان کی جانب سے فراہم کردہ بلٹ پروف گاڑی استعمال کرنے سے انکار کردیا ہے۔نیپال کے وزارت خارجہ کے ترجمان کھاگا ناتھ ادھی کاری نے پیر کو بتایا کہ نواز شریف اپنی گاڑی ساتھ لے کر آئیں گے جبکہ دیگر ملکوں کے سربراہوں کو ہندوستان سے برآمد شدہ گاڑیاں فراہم کی جائیں گی۔وزارت خارجہ کے ترجمان نے اس تاثر کی تردید کی کہ یہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان اآج کل جاری تناؤ کا نتیجہ ہے۔انہوں نے اے ایف پی کو بتایا کہ اس کا ہرگز یہ مطلب نہیں وہ ہندوستان کی بنی ہوئی گاڑی استعمال نہیں کرنا چاہتے، جب امریکی صدر اآئے تھے تو وہ بھی اپنی گاڑی ساتھ لائے، یہ کوئی مسئلے والی بات نہیں۔ساؤتھ ایشین ایسوسی ایشن فار ریجنل کوآپریشن سمٹ میں افغانستان، بنگلہ دیش، بھوٹان، مالدیپ، سری لنکا، نیپال، ہندوستان اور پاکستان کے رہنما شرکت کریں گے۔واضح رہے کہ حال ہی میں ہندوستان اور پاکستان کے درمیان متنازع سرحد لائن آف کنٹرول پر تعلقات انتہائی کشیدہ رہے تھے اور فائرنگ کے تبادلے میں کم از کم 20 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔جوہری طاقت کے حامل دونوں ملک ایک دوسرے پر سیز فائر کی خلاف ورزی کے الزامات عائد کرتے رہے ہیں جس کا آغاز چھ اکتوبر کو ہوا تھا اور تاحال جاری ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*